LOADING

Type to search

24۔ قاتل کو جاننے کے لئے بیل ذبح کرنا

உருது விளக்கங்கள்

24۔ قاتل کو جاننے کے لئے بیل ذبح کرنا

Share

24۔ قاتل کو جاننے کے لئے بیل ذبح کرنا

آیت نمبر2:67 سے لے کر 2:73 تک ایک بیل ذبح کرنے کواللہ نے اسرائیلوں کو جو حکم دیا تھا اس کی تفصیل ہے۔

موسیٰ نبی کے زمانے میں ایک شخص مارا جاتا ہے۔ اس کو کس نے مارامعلوم نہیں ہوا۔ موسیٰ نبی کی قوم ان سے قاتل کو ڈھونڈ نکالنے کے لئے کہتی ہے۔ اللہ نے کہا کہ ایک بیل ذبح کر کے اس کو مقتول پر مارو تو مر نے والا زندہ ہو کر اپنے قاتل کی نشان دہی کریگا۔

کوئی ایک بیل کو ذبح کر دیتے تو کافی رہا ہوگا۔ بے جا سوالیں اٹھا کر وہ لوگ اپنے خود پر تکلیفیں پیدا کرلیں۔ اس واقعہ ہی کی وجہ سے اس سورت کا نام وہ بیل رکھا گیا۔